PMLN on PM VISIT TO CHINA AND EFFORTS TO DISRUPT ECONOMIC DEVELOPMENT PROCESS

وزیر اعظم محمد نوازشریف کا دورہ چین دونوں ممالک کے درمیان تعلقات اور پاکستان کی معاشی ترقی کے حوالے سے تاریخی اور سنگِ میل ثابت ہوگا ۔سینیٹر مشاہداللہ خان
اس دورے کے دوران ملک کی اقتصادی ترقی اور توانائی و انفرا سٹرکچر سمیت دیگر شعبوں میں تعاون کو فروغ دینے کے لئے اربوں ڈالر کے نئے منصوبوں کا اجرا ءکیا جائے گا۔مشاہداللہ خان
احتجاج اور دھرنا سیاست کا ایک مقصد پاکستان اور چین کے درمیان تعلقات میں گزشتہ 14ماہ سے جاری اشتراک ِ عمل اور تعاون کی کوششوں اور نئی جہتوں کو بھی ناقابلِ تلافی نقصان پہنچانا تھا۔ سینیٹر مشاہداللہ خان
عوام نے احتجاج ، انتشار ، نفرت اور دھرنوں کی سیاست کو مسترد کردیا ہے، عمران خان کو بھی اس حقیقت کا اعتراف کرلینا چاہئے ۔ سینیٹر مشاہداللہ خان

پاکستان مسلم لیگ (ن) کے مرکزی سیکرٹری اطلاعات سینیٹر مشاہد اللہ خان نے کہا ہے کہ وزیر اعظم محمد نوازشریف کا دورہ چین دونوں ممالک کے درمیان تعلقات اور پاکستان کی معاشی ترقی کے حوالے سے تاریخی اور سنگِ میل ثابت ہوگا ۔ انھوں نے کہا کہ اس دورے کے دوران ملک کی اقتصادی ترقی اور توانائی و انفرا سٹرکچر سمیت دیگر شعبوں میں تعاون کو فروغ دینے کے لئے اربوں ڈالر کے نئے منصوبوں کا اجرا ءکیا جائے گا۔مشاہداللہ خان نے کہا کہ بدقسمتی سے گزشتہ چند ماہ کے دوران بعض عناصر نے انتشار اور نفرت کی سیاست کو ہوا دے کر ملک کو سیاسی و اقتصادی عدم استحکام سے دوچار کرنے کی خواہشمند بعض قوتوں کے مذموم ارادوں کو پورا کرنے کی دانستہ یا نادانستہ کوششیں کیں لیکن پاکستان کے عوام نے اجتماعی شعور کا مظاہرہ کرتے ہوئے ایسی تمام کوششوں کو ناکام بنا دیا۔ انھوں نے کہا کہ احتجاج اور دھرنا سیاست کا ایک مقصد پاکستان اور چین کے درمیان تعلقات میں گزشتہ 14ماہ سے جاری اشتراک ِ عمل اور تعاون کی کوششوں اور نئی جہتوں کو بھی ناقابلِ تلافی نقصان پہنچانا تھا تاہم دونوں ممالک کی صاحب بصیرت قیادتوں اور ان کے درمیان موجود باہمی اعتماد کی وجہ سے ایسی کوششیں بھی کامیاب نہ ہوسکیں ۔ مشاہداللہ خان نے کہا کہ وزیر اعظم نواز شریف نے قوم کے ساتھ کیا گیا ہر عہد ِوفا اور ہر وعدہ پورا کرنے کا عزم کر رکھا ہے ۔ انھوں نے کہا کہ وزیر اعظم نے قوم کے ساتھ اپنے پہلے خطاب میں کہا تھا کہ ایک ایک لمحے کو قوم کی امانت سمجھ کر گزاریں گے اور عوام کو ہر لمحہ اور ہر دن ترقی کی جانب کوئی نہ کوئی بڑھتا ہوا قدم دکھائی دے گا۔ مشاہد اللہ خان نے ان خیالات کا اظہار پارٹی کے میڈیا سیل سے جاری ہونے والی پریس ریلیز میں کیا ۔ انھوں نے کہا کہ وزیر اعظم نے اپنے دور ِ حکومت کے پہلے ایک سال کے دوران اس وعدے کو پورا کیا ہے اور کوئی دن ایسا نہیں گزرا جس دن عوام کی بہتری کے لئے کسی نئے منصوبے یا پاکستان کی ترقی کے لئے کوئی اقدام نہ کیا گیا ہو۔ مشاہد اللہ خان نے کہا کہ ہماری ساری توجہ قوم کے سالوں سال ضائع کرنے کی تلافی کرنے پر مرکوز ہے اور ہم چاہتے ہیں کہ ملک اور عوام کے ساتھ 67سال کے دوران کی جانے والی زیادتیوں کا ازالہ کیا جائے ۔ انھوں نے کہا کہ عوام نے احتجاج ، انتشار ، نفرت اور دھرنوں کی سیاست کو مسترد کردیا ہے، عمران خان کو بھی اس حقیقت کا اعتراف کرلینا چاہئے کہ پاکستان کے عوام ملک میں ترقی کا عمل جاری رہتا ہوا دیکھنا چاہتے ہیں اور انہیں ملک کے اندر بار بار کھیلے جانے والے اقتدار کے میوزیکل چیئر سے کوئی دلچسپی نہیں ۔ مشاہد اللہ خان نے کہا کہ بہترہوگا عمران خان مایوسی میں غلط باتیںاور الزام تراشی کی سیاست کرنے کی بجائے 4سال خیبر پختونخوا کے عوام کی خدمت کریںاور دیگر صوبوں کے لئے اپنے صوبے کو رول ماڈل بنا کر پیش کریں ۔ انھوں نے کہا کہ ہمیں ماضی کی غلطیوں سے سبق سیکھنا ہے اور ملک کو بحرانوں میں دھکیلنے کی بجائے بہتر مستقبل کی جانب ہر لمحہ پیش رفت کو یقینی بنانا ہے۔