Nawaz Sharif’s popularity continues to grow among overseas Pakistanis

(London)  Javed Malik, Advisor International Relations to Nawaz Sharif, President PML(N) and Former Prime Minister of Pakistan has said that Former Prime Minister Nawaz Sharif is equally popular among Pakistanis both living inside and outside Pakistan. The warmth with which he has been received at ceremonies held in Dubai, United Arab Emirates, Germany and London and the among of people who have joined the ranks of PML(N) speaks volumes of his growing popularity and is a clear example of how he inspires people with his visionary leadership. Javed Malik was speaking at the Overseas Pakistanis Convention in Europe held under the Chairmanship of Muhammad Nawaz Sharif, in which thousands of Pakistanis living across Europe attended to expressed their full support and solidarity with Pakistan Muslim League (N) and its leader, Muhammad Nawaz Sharif

Ahsan Iqbal to lead 11 members Task Force on Energy Crisis

( )
پاکستان انجینئرنگ کونسل کے چیئرمین عبدالقادر شاہ نے احسن اقبال رکن قومی اسمبلی کی سربراہی میں انجینئرنگ کونسل کی توانائی کے بحران کے حل کیلئے 11 رکنی ٹاسک فورس تشکیل دے دی۔ یہ ٹاسک فورس ملک میں توانائی کے بحران پر قابو پانے کیلئے انجینئرز کی مشاورت سے سفارشات مراتب کرے گی۔ٹاسک فورس کا پہلا اجلاس18 جولائی کوواپڈا ہاؤس لاہور میں منعقد ہوگا۔

Iqbal Zafar Jhagra asks govt to take initiative to unveil the secret hands behind the conspiracy of provincialism


لاہور اور کوئٹہ میں دہشت گردی کے واقعات ملک میں نسلی اور لسانی فسادات کروانے کی منظم سازش ہیں۔ اقبال ظفر جھگڑا

پاکستان مسلم لیگ(ن) مرکزی سیکرٹری جنرل اقبال ظفرجھگڑا نے لاہور اور کوئٹہ میں پختون برادری سے تعلق رکھنے والے اہلکاروں اور عام شہریوں کی ہلاکتوں پرگہرے افسوس کا اظہار کرتے ہوئے اس کی شدید الفاظ میں مذمت کی ہے۔انہوں نے کہاکہ یہ واقعات ملک میں نسلی اور لسانی فسادات کروانے کی منظم سازش ہیں۔ اقبال ظفر جھگڑا نے کہاکہ بدقسمتی سے موجودہ حکومت نے اقتدار میں آنے کے بعد جنرل پرویزمشرف کے لگائے ہوئے زخموں کامداوا کرنے کی بجائے اُس کی پالیسیوں کا تسلسل جاری رکھا اور ملک میں مذہبی اور لسانی ہم آہنگی کوفروغ دینے کی بجائے ساری توجہ محض اقتدار کی بندربانٹ اور لوٹ کھسوٹ پر مرکوز رکھی ،جس کا نتیجہ کراچی سے خیبر تک ان افسوسناک واقعات کی صورت ہمارے سامنے آ رہا ہے۔ انہوں نے کہاکہ حالیہ واقعات کو کراچی اور بلوچستان میں ڈھائے جانے والے خونی واقعات سے الگ طورپر نہیں دیکھاجاسکتا۔ اگر حکومت نے صوبہ بلوچستان اور کراچی میں آئے روزہونے والی ٹارگٹ کلنگ کے واقعات کے پس پردہ ملک دشمن عناصر کو منظر عام پر لاکر اُن کے خلاف کاروائی کی ہوتی توملک میں کسی کو بے گناہ معصوم انسانی جانوں سے کھیلنے کی جرات نہ ہوتی۔انہوں نے کہا کہ پاکستان کے عوام باشعور ہیں وہ ان سازشوں کو پہچانتے ہوئے انہیں ہمیشہ کی طرح ناکام بنا دیں گے۔ اقبال ظفرجھگڑا نے کہاکہ حکومت اِن دونوں واقعات کی اعلیٰ سطح پر تحقیقات کرانے کا اہتمام کرے تاکہ اِس مذموم سازش کا مستقل طورپر سدباب کیاجاسکے۔ انہوں نے کہاکہ پنجاب حکومت پہلے ہی اِس بات کی یقین دہانی کراچکی ہے کہ واقعہ کے پس پردہ کردار وں اور اُن کے پیچھے کارفرما محرکات کو شفاف تحقیقات کے ذریعے منظر عام پر لایاجائے گا۔ اس سلسلے میں وفاقی حکومت اور وفاق کے ماتحت قانون نافذ کرنے والے اداروں کا بھی فرض ہے کہ وہ اپنی ذمہ داری پوری کریں۔

 

Ishaq Dar informal talk on Contempt of Court in his chamber

 حکمران ایسے کاموں سے اجتناب کریں جن سے پارلیمنٹ بے توقیرہو،حکومت توہین عدالت کابل پانچ منٹ میں منظورکرالیتی ہے توےہ بڑا المیہ اورStrike downہوگا،اسحاق ڈار

گرحکومت میں ہمت ہے تووہ اکثریت کے بل بوتے پرپارلیمنٹ کو بلڈوزکرکے توہین عدالت کا قانون عجلت میں پاس کرانے کی بجائے آئین کی متعلقہ دفعات پربھی ترمیم ایوان میں بحث کےلئے پیش کرے حکومت کے مشیرےاد رکھیں کہ توہین عدالت کابل منظورکرابھی لیاجائے تو آئین کی دفعہ 63 ون جی کے تحت وزیراعظم سمیت کسی بھی منتخب رکن کو عدالتی فیصلوں کا تمسخر اڑانے پرنااہل قراردیاجاسکتاہے ۔

اگراراکین سینیٹ کو اس بل پرغوروخوص کےلئے دو دن کا وقت دے دیاجائے تو کوئی قیامت نہیں ٹوٹ پڑے گی ،عدالت نے 12جولائی کو وزیراعظم پرتوہین عدالت لاگو نہیں کردینا لیکن حقیقت ےہ ہے کہ حکومت کی نیت درست نہیں، توہین عدالت کابل 2012 راتوں رات منظورکرانے کا مقصدعدالتی فیصلوں پرعمل درآمدنہ کرکے توہین عدالت کی زدمیں بچناہے ،سینیٹ میں قائدحزب اختلاف کی سینیٹ میں حزب اختلاف کے سینیٹرزاورصحافیوں سے گفتگ غیررسمی گفتگو

    (    )

سینیٹ میں قائدحزب اختلاف سینیٹرمحمداسحاق ڈارنے کہاہے کہ حکمران ایسے کاموں سے اجتناب کریں جن سے پارلیمنٹ بے توقیرہو،حکومت توہین عدالت کابل پانچ منٹ میں منظورکرالیتی ہے توےہ بڑا المیہ اورStrike downہوگا،اگرحکومت میں ہمت ہے تووہ اکثریت کے بل بوتے پرپارلیمنٹ کو بلڈوزکرکے توہین عدالت کا قانون عجلت میں پاس کرانے کی بجائے آئین کی متعلقہ دفعات پربھی ترمیم ایوان میں بحث کےلئے پیش کرے حکومت کے مشیرےاد رکھیں کہ توہین عدالت کابل منظورکرابھی لیاجائے تو آئین کی دفعہ 63 ون جی کے تحت وزیراعظم سمیت کسی بھی منتخب رکن کو عدالتی فیصلوں کا تمسخر اڑانے پرنااہل قراردیاجاسکتاہے ۔مسلم لیگ(ن) حکومت کی طرف سے متعارف کردہ بل کی بھرپورمخالفت کرے گی اوراس بات کی پوری کوشش کی جائے گی کہ ےہ بل منظورنہ ہوسکے ۔انہوں نے ان خیالات کا اظہاراپنے چیمبرمیں حزب اختلاف سے تعلق رکھنے والے سینیٹرزاوربعض سینئرصحافیوں سے غیررسمی گفتگوکرتے ہوئے کیا۔اسحاق ڈارنے کہاکہ حکومت جن رولز کی بنیادپرتمام قواعد وضوابط کو معطل کرکے دوہری شہریت کابل راتوں رات منظورکرانا چاہ رہی ہے ،قانون میں واضح طورپردرج ہے کہ قواعد وضوابط اسی صورت میں معطل کئے جاسکتے ہیں کہ ےاتو ملک میں غیرےقینی صورتحال ہوےا حالات پیچیدہ ہوں (ملک کوکسی مشکل صورتحال کاسامناہو) ،اسحاق ڈارنے کہاکہ جب ایسی صورتحال نہیں اورنہ ہی سینیٹ کا اجلاس ملتوی جاناہے تو اس طرح کی عجلت حکومت کی بدنیتی کو ظاہرکررہی ہے ۔اسحاق ڈارنے کہاکہ حکومت کے نامناسب فیصلوں ،بدنیتی اورمحض اکثریت کے بل پرجلد بازی میں بغیرکسی غوروخوص کے قانو ن ساز ی کرنے سے نہ صرف غلط فیصلے کئے جارہے ہیں بلکہ اس کے نتیجے میں پورے ایوان کا تاثربھی نہایت منفی جارہاہے اوردنیامیں بھی ہماری جگ ہنسائی ہورہی ہے ۔انہوں نے کہاکہ ہم ایوان میں تمام اراکین کے ضمیرکو جگانے کی کوشش کرتے ہیںکسی بھی رکن پارلیمنٹ کا ےہ بنیادی حق نظراندازنہیں کیاجاسکتاکہ وہ کسی بھی پیش کردہ بل کو پڑھے اوراچھی طرح سوچ بچارکرکے اس کاجائزہ لے کراس کی حمایت ےا مخالفت کرے ،ہمیں شخصی مصلحتوں اورذاتی ےا جماعتی مفادات کوبالائے طاق رکھ کراپنے ضمیرکے مطابق فیصلہ کرنا چاہیے ۔اسحاق ڈارنے کہاکہ محض عددی برتری کی بنیادپرآنا فانا قانون سازی کرنا نہایت ہی شرمناک ہوگا۔اگراراکین سینیٹ کو اس بل پرغوروخوص کےلئے دو دن کا وقت دے دیاجائے تو کوئی قیامت نہیں ٹوٹ پڑے گی ،عدالت نے 12جولائی کو وزیراعظم پرتوہین عدالت لاگو نہیں کردینا لیکن حقیقت ےہ ہے کہ حکومت کی نیت درست نہیں اس توہین عدالت کابل 2012 راتوں رات منظورکرانے کا مقصدعدالتی فیصلوں پرعمل درآمدنہ کرکے توہین عدالت کی زدمیں بچناہے ۔ ۔انہوں نے کہاکہ حکومت کے مشیرنالائق ہیں اورسمجھ نہیں آتی کہ وہ حکومت کو کس طرف لے جانا چاہتے ہیں ،حکومتی مشیرقانون تومتعارف کرارہے ہیں لیکن وہ ےہ نہیں جانتے کہ اس حوالے سے آئین کی دفعہ 63ون جی بھی موجودہے ۔۔اسحاق ڈارنے کہاکہ اسی عجلت اوربلاسوچے سمجھے قومی اسمبلی سے ےہ بل منظورکرانے کا ےہ نتیجہ پہلے ہی سامنے آچکاہے کہ قومی اسمبلی نے توہین عدالت بل 2012ءکے منظورہوتے ہی اس کے خلاف سپریم کورٹ میں ایک پیٹیشن کی جاچکی ہے ۔اسحاق ڈارنے کہاکہ حکومت کے نامناسب فیصلوں ،بدنیتی اورمحض اکثریت کے بل پرجلد بازی میں بغیرکسی غوروخوص کے قانو ن ساز ی کرنے سے نہ صرف غلط فیصلے کئے جارہے ہیں بلکہ اس کے نتیجے میں پورے ایوان کا تاثربھی نہایت منفی جارہاہے اوردنیامیں بھی ہماری جگ ہنسائی ہورہی ہے

PML-N spokesperson onEx-PM Gillani’s statement

 ےوسف رضاگیلانی کا اصولوں کی خاطراقتدارچھوڑنے کے حوالے سے دیاگیابیان نہایت ہی مضحکہ خیزہے،ترجمان پاکستان مسلم لیگ(ن)

 ےوسف رضاگیلانی کسی اصول کی خاطرنہیں زرداری کی کرپشن کے 6کروڑڈالروں کی حفاظت کرتے کرتے عدلیہ کی توہین کرکے اقتدارسے علیحدہ کردیئے گئے۔ےوسف رضا گیلانی کاشمارایک ایسے بدقسمت وزیراعظم کے طورپرکیاجائے گاجسے پوری قومی اسمبلی نے اعتمادکا ووٹ دیالیکن وہ اپنے اتحادیوں سمیت کسی ایک جماعت کو بھی ساتھ لے کرچلنے میں کامیاب نہ ہوسکے

ےوسف رضاگیلانی نے قوم کو ریلیف دینے کی بجائے اپنے اہل خانہ اورآصف زرداری کے ذاتی دوستوں کوکرپشن کاکھلا لائنس دے کران پرقومی خزانے کے دروازے کھول دیئے۔ ےوسف رضاگیلانی کوغیرآئینی طورپربرطرف نہیں کیاگیابلکہ وہ آئین اورقانون کے تحت مجرم قراردیئے جانے پرنااہل ہوگئے

    (     )

پاکستان مسلم لیگ(ن) کے ترجمان نے کہاہے کہ ےوسف رضاگیلانی کا اصولوں کی خاطراقتدارچھوڑنے کے حوالے سے دیاگیابیان نہایت ہی مضحکہ خیزہے۔ترجمان نے کہاکہ قوم سے اس سے بڑا مذاق نہیں ہوسکتاکہ مینڈیٹ عوامی مسائل کے حل اورآمرکے لگائے گئے زخموں کامداوا حاصل کیااورہروہ کام کیاجس سے آمرکے لگائے زخم مزیدگہرے ہوتے چلے گئے انہوں نے کہاکہ ےوسف رضاگیلانی کسی اصول کی خاطرنہیں زرداری کی کرپشن کے 6کروڑڈالروں کی حفاظت کرتے کرتے عدلیہ کی توہین کرکے اقتدارسے علیحدہ کردیئے گئے۔ےوسف رضا گیلانی کاشمارایک ایسے بدقسمت وزیراعظم کے طورپرکیاجائے گاجسے پوری قومی اسمبلی نے اعتمادکا ووٹ دیالیکن وہ اپنے اتحادیوں سمیت کسی ایک جماعت کو بھی ساتھ لے کرچلنے میں کامیاب نہ ہوسکے اورانکی موجودگی میں کاروبارمملکت انہی کی جماعت کے شریک چیرمین آصف علی زرداری قصرصدارت سے چلاتے رہے ۔انہوں نے کہاکہ پارلیمنٹ نے مختلف آئینی ترامیم کے ذریعے ےوسف رضا گیلانی کو اختیارات دیئے لیکن انہوں نے ان اختیارات کوملک وقوم کی بہتری کےلئے استعمال کرنے کی بجائے صرف آصف زرداری کی خوشنودی کےلئے استعمال کیا۔ےوسف رضاگیلانی نے قوم کو ریلیف دینے کی بجائے اپنے اہل خانہ اورآصف زرداری کے ذاتی دوستوں کوکرپشن کاکھلا لائنس دے کران پرقومی خزانے کے دروازے کھول دیئے ۔ترجمان نے کہاکہ ےوسف رضاگیلانی کوغیرآئینی طورپربرطرف نہیں کیاگیابلکہ وہ آئین اورقانون کے تحت مجرم قراردیئے جانے پرنااہل ہوگئے ۔ترجمان نے کہاکہ ےوسف رضاگیلانی جس پارلیمنٹ کا سراونچا کرنے کا دعوی کررہے ہیں اس پارلیمنٹ کوخودانہوں نے بارباربے توقیرکیااورخط نہ لکھ کرعوامی مینڈیٹ کی بے حدتوہین کی۔

Iqbal Zafar Jhagra inaugurates PML-N youth wing information center

 پاکستان کو ترقی ےافتہ ممالک کی صف میں کھڑ ا کرنے کےلئے نوجوان نسل کو آگے آنا پڑے گا،اقبال ظفرجھگڑا

نوجوان نسل کی تعلیم پرسرماےہ کاری کرنے والی قومیں ہی آج دنیا میں سب سے آگے ہیں ،مسلم لیگ(ن) ےوتھ ونگ انفارمیشن سنڑ کے افتتاح کے بعد تقریب سے خطاب

 اسلام آباد(    )

پاکستان مسلم لیگ(ن) کے مرکزی سیکرٹری جنرل اقبال ظفرجھگڑا نے کہاکہ پاکستان کو ترقی ےافتہ ممالک کی صف میں کھڑ ا کرنے کےلئے نوجوان نسل کو آگے آنا پڑے گا۔انہوں نے کہاکہ نوجوان نسل کی تعلیم پرسرماےہ کاری کرنے والی قومیں ہی آج دنیا میں سب سے آگے ہیں ۔انہو ںنے ان خیالات کا اظہار اسلام آباد میں مسلم لیگ(ن) ےوتھ ونگ کے انفارمیشن سنٹرکا افتتاح کرنے کے بعدتقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔اقبال ظفرجھگڑا نے کہاکہ موجودہ صدی علم کی صدی ہے جس میں قوموں کی ترقی اورخوشحالی کا دارومدارانکی علمی صلاحیتوں پرہوگالیکن موجودہ حکومت نے تعلیم کی ترقی کےلئے کوئی ایسا منصوبہ نہیں بنایاکہ جس کی وجہ سے ملک میں پڑھے لکھے نوجوانوں کی تعداد میں اضافہ ہوسکے ۔اقبال ظفرجھگڑا نے کہاکہ مسلم لیگ(ن) ےوتھ ونگ انفارمیشن سنٹرنوجوان نسل تک معلومات کی رسائی اورپاکستان مسلم لیگ(ن) کے نظریات اورترقیاتی ایجنڈے کو پھیلانے میں اہم کردار اداکرے گا۔اس موقع پرپیپلزپارٹی کی ےوتھ ونگ کی سابق صدرکرن فاطمہ نے بھی پاکستان مسلم لیگ(ن) میں شمولیت کاباقاعدہ اعلان کیااورپاکستان مسلم لیگ(ن) کے صدرمحمدنوازشریف کی قیادت پربھرپوراعتماد کا اظہارکیا۔تقریب میں رکن صوبائی اسمبلی عائشہ جاوید،علی خان ےوسف زئی ،میاں راشدعلی ،سیدعمیرزیدی ،رانا شاہداوردیگرمسلم لیگ(ن) ےوتھ ونگ کے عہدیداران اورکارکنوں نے شرکت کی ۔

Ahsan Iqbal on Contempt Law passed by N. A

 توہین عدالت قانون دراصل این آراو کی کرپشن کو تحفظ دینے کاقانون ہے تاکہ این آراو کیس میں سپریم کورٹ کے فیصلے پرعمل نہ کرنے والے وزیراعظم کو قانون کی پکڑ سے بچایا جاسکے ،احسن اقبال

 

صدرزرداری اورانکے 60ملین ڈالربچانے کی خاطر حکومت نے آئین ،جمہوریت اورپارلیمنٹ کو داﺅ پرلگا رکھاہے اورمحض ایک شخصیت کی وجہ سے پورا جموری نظام زلزلے کی زد میں ہے اگرحکومت سپریم کورٹ کے فیصلوں پرعمل درآمد کرتے ہوئے سوئس حکام کو خط لکھ دے تو عدلیہ کے ساتھ اس کا ساتھ تنازعہ ختم ہوجائے گا

 

حکومت گزشتہ چارسالوں میں فیل ہونے کے بعد اب سیاسی ناٹک کا سہارالے رہی ہے اورآئین اورقانون سے متصاد م قانون سازی کرکے وہ چاہتی ہے کہ عدلیہ ان قوانین کو غیرقانونی قراردے اوروہ عوام کی نظروں میں مظلومیت کی دھول جھونک سکے،ڈپٹی سیکرٹری جنرل پاکستان مسلم لیگ(ن)

    (      )

پاکستان مسلم لیگ(ن) کے ڈپٹی سیکرٹری جنرل احسن اقبال نے کہاہے کہ توہین عدالت قانون دراصل این آراو کی کرپشن کو تحفظ دینے کاقانون ہے تاکہ این آراو کیس میں سپریم کورٹ کے فیصلے پرعمل نہ کرنے والے وزیراعظم کو قانون کی پکڑ سے بچایاجاسکے ۔انہوں نے کہاکہ صدرزرداری اورانکے 60ملین ڈالربچانے کی خاطر حکومت نے آئین ،جمہوریت اورپارلیمنٹ کو داﺅ پرلگا رکھاہے اورمحض ایک شخصیت کی وجہ سے پورا جموری نظام زلزلے کی زد میں ہے اگرحکومت سپریم کورٹ کے فیصلوں پرعمل درآمد کرتے ہوئے سوئس حکام کو خط لکھ دے تو عدلیہ کے ساتھ اس کا ساتھ تنازعہ ختم ہوجائے گا اگرحکومت سمجھتی ہے کہ صدرزرداری بے گناہ ہیں اسے اس قدرپریشانی کیوں ہے اوروہ اپنے وزیراعظم کو قربانی کابکرا بناکر کیوں پیش کررہی ہے ۔انہوں نے کہاکہ حکومت گزشتہ چارسالوں میں فیل ہونے کے بعد اب سیاسی ناٹک کا سہارالے رہی ہے اورآئین اورقانون سے متصاد م قانون سازی کرکے وہ چاہتی ہے تا کہ عدلیہ ان قوانین کو غیرقانونی قراردے اوروہ عوام کی نظروں میں مظلومیت کی دھول جھونک سکے ۔انہوں نے کہاکہ پاکستان کے عوام باشعورہیں اورایسی شعبہ بازی سے انہیں گمراہ نہیں کیاجاسکتا۔مسلم لیگ(ن) نے جس طرح قومی اسمبلی میں اس قانون کی مخالفت کی اسی طرح اسمبلی سے باہربھی اس کی مخالفت کرے گی اورحکومت کو قانون کی حکمرانی اورعدلیہ کی آزادی سے کھلینے سے کاموقع نہیں دے گی ۔انہوں نے کہاکیہ دوہری شہریت کابل حکومت اوراس کے اتحادیوں کےلئے ہے ۔انہوں نے کہاکہ مسلم لیگ(ن) کا کلیدی عہدے پرفائز کوئی بھی عہدیداردوہری شہریت نہیں رکھتا ۔

PML-N reaction on Rehman Malik resignation from Senate

ملک میں جاری بحران رحمان ملک کے استعفے سے نہیں ،صدرزرداری کے جانے سے ختم ہوگا۔ترجمان


پاکستان مسلم لیگ(ن) کے کسی بھی کلیدی عہدیدارکے پاس دوہری شہریت نہیں ،تمام بحرانوں سے نکلنے کا واحدراستہ فوری انتخابات ہیں ۔ ترجمان مرکزی میڈیا سیل پاکستان مسلم لیگ(ن)

   (      )

پاکستان مسلم لیگ(ن) کے مرکزی میڈیا سیل کے ترجمان نے کہاہے کہ ملک میں جاری بحران رحمان ملک کے استعفے سے نہیں ،صدرزرداری کے جانے سے ختم ہوگا۔ترجمان نے کہاکہ حکومت کی کرپشن،نااہلی اوربدانتظامی نے ملکی معیشت کوکنگال کرکے رکھ دیاہے ۔ترجمان نے کہاکہ تمام بحرانوں سے نکلنے کا واحدراستہ فوری انتخابات ہیں ۔ترجمان نے کہاکہ پاکستان مسلم لیگ(ن) کے کسی بھی کلیدی عہدیدارکے پاس دوہری شہریت نہیں ۔

Ahsan Iqbal on CEC’s appointment


جسٹس فخرالدین جی ابراہیم کی چیف الیکشن کمشنرتقرری نے پاکستان مسلم لیگ(ن) کے اسمبلیوں میں رہنے اوراپوزیشن کے کردارکو درست ثابت کردیا ،احسن اقبال
 اگرپاکستان مسلم لیگ(ن) استعفے دیکراسمبلیوں سے باہرآجاتی توحکومت من پسندچیف الیکشن کمشنراورنگران حکومت ٹھونستی ، ڈپٹی سیکرٹری جنرل پاکستان مسلم لیگ(ن)
   (    )

پاکستان مسلم لیگ(ن) کے ڈپٹی سیکرٹری جنرل احسن اقبال نے کہاہے کہ جسٹس فخرالدین جی ابراہیم کی چیف الیکشن کمشنرتقرری نے پاکستان مسلم لیگ(ن) کے اسمبلیوں میں رہنے اوراپوزیشن کے کردارکو درست ثابت کردیا ۔انہوں نے کہاکہ اگرپاکستان مسلم لیگ(ن) استعفے دیکراسمبلیوں سے باہرآجاتی توحکومت من پسندچیف الیکشن کمشنراورنگران حکومت ٹھونستی ۔

PTI pioneers in Europe join PMLN

جرمنی میں تحریک انصاف کے بانی اورسابق صدرتوقیربٹر،فرانس میں تحریک انصاف کے سابق صدرتحسین انورشاہ اورامجدگوندل جنہو ںنے فرانس میں تحریک انصاف کی بنیاد رکھی تھی کا فرینکفرٹ (جرمنی) میں پاکستان مسلم لیگ(ن) میں شمولیت کااعلان

پاکستان مسلم لیگ(ن) کے صدرمحمدنوازشریف،سینیٹرمشاہداللہ خان ،رکن قومی اسمبلی خواجہ محمدآصف ،شیخ قیصرمحموداور پاکستان مسلم لیگ(ن) کے جرمنی میں صدررانا لیاقت علی کا پارٹی شامل ہونے والے ان افراد کوخوش آمدید

پارٹی میں نئے شامل ہونے والے افراد پاکستان مسلم لیگ(ن) کا نظرےہ پھیلانے کےلئے اوورسیز پاکستانیوں میں اہم کرداراداکریں گے ۔صدرپاکستان مسلم لیگ محمدنوازشریف

     (      )

جرمنی میں تحریک انصاف کے بانی اورسابق صدرتوقیربٹر،فرانس میں تحریک انصاف کے سابق صدرتحسین انورشاہ اورامجدگوندل جنہو ںنے فرانس میں تحریک انصاف کی بنیاد رکھی تھی انہوں نے فرینکفرٹ (جرمنی) میں پاکستان مسلم لیگ(ن) میں شمولیت کااعلان کردیا۔ان افراد نے اپنی پاکستا ن مسلم لیگ(ن) میں شمولیت کا اعلان فرینکفرٹ میں ہونے والے پاکستان مسلم لیگ(ن) کے کنونشن میں کیاجس کا انعقاد پاکستان مسلم لیگ (ن) کے شعبہ اوورسیز نے کیاجس میں ےورپ کے مختلف ملکوں میں رہنے والے پاکستانی افراد نے کی ۔اس کنونشن کے مہمان خصوصی پاکستان مسلم لیگ(ن) کے صدرمحمدنوازشریف تھے جبکہ مرکزی سیکرٹری اطلاعات سینیٹرمشاہداللہ خان ،رکن قومی اسمبلی خواجہ محمدآصف اورپاکستان مسلم لیگ(ن) اوورسیز شعبہ کے جنرل سیکرٹری شیخ قیصرمحمود بھی اس موقع پرموجود تھے ۔پاکستان مسلم لیگ(ن) کے صدرمحمدنوازشریف،سینیٹرمشاہداللہ خان ،رکن قومی اسمبلی خواجہ محمدآصف ،شیخ قیصرمحموداور پاکستان مسلم لیگ(ن) کے جرمنی کے صدررانا لیاقت علی نے پارٹی شامل ہونے والے ان افراد کوخوش آمدید کہااوراس توقع کا اظہارکیاکہ نئے شامل ہونے والے افراد پاکستان مسلم لیگ(ن) کا نظرےہ پھیلانے کےلئے اوورسیز پاکستانیوں میں اہم کرداراداکریں گے ۔اسی طرح فرینکفرٹ کنوکشن میں شریک ہونے والے تحریک انصاف کے دیگررہنماﺅں نے بھی محمدنوازشریف کی قیادت پرمکمل اورغیرمشروط اعتماد کا اظہارکیااورکہاکہ وہ اپنی تما م ترتوانائیاں پاکستان کو ایک رفاعیریاست بنانے اورمستحکم معیشت کے لئے صرف کریں گے 

 

Tauqeer Buttar, Poineer& Ex-President PTI Germany chapter joins PML-N in Frankfort Germany. Meanwhile, the former president PTI France Chapter Tehseen Anwar Shah & Amjad Gondal (PTI) the first two starters/pioneers of PTI France also announced joining the PML-N in Frankfort Germany.

The aforementioned announcements were made during the convention sat Frankfort Germany which was organized by the overseas Chapter of PML-N for the Pakistanis living in different European countries. PML-N Quaid Muhammad Nawaz Sharif was the chief guest in this convention whereas the Central Secretary Information Senator Mushahidullah Khan, Member National Assembly Khawaja Muhammad Asif and the General Secretary Overseas Chapter of the PML-N Sheikh Kaiser Mehmood were also among speakers of this convention.

President PMLN muhammad Nawaz Sharif, Senator Mushahidullah Khan, Khawaja Muhammad Khawaja Asif MNA, Sheikh Kaiser Mehmood General Secretary PMLN Overseas and Rana Liaqat Ali, President PMLN Germany Chapter on the occasion greeted the new comers into the PMLN and hoped they will play significant role in promoting the party ideology among the overseas Pakistani communities. Similarly, a considerable number of PTI workers who attended the PML-N convention in Frankfort Germany also envisaged their trust into the leadership of the PML-N Quaid Muhammad Nawaz Sharif and pledged their unconditional commitment to envisage their capabilities and resources to achieve the goals of making Pakistan a true welfare and economically stable state in the world.