People to bury looters’ politics in elections: Shahbaz

LAHORE: Chief Minister Shahbaz Sharif has said the Zardari government is behind torturous loadshedding, price hike, poverty and unemployment.

Addressing office-bearers and workers of the PML-N from Gujrat district, he said those who pushed the nation into darkness during Sehr, Iftari and Tarveeh in the sacred month of Ramazan, should stop dreaming of ruling the country in future. He said that people would bury the politics of corruption and plundering of the incapable rulers forever in general elections.

The chief minister said that all problems were created by the Zardari gang and if the country got rid of it, all its problems would be solved. He said that a new Pakistan, free from corruption, will be built under the leadership of PML-N President Nawaz Sharif, where there will be supremacy of law, constitution and justice and every one would have equal opportunities.

Announcing various development schemes for Gujrat, the chief minister said that more than six billion rupees have been spent on development projects in the district during the last four and a half years.

He also announced upgradation of Government Higher Secondary School Tanda to a degree college, construction of a cricket ground in Jalalpur Jattan and construction and repair of roads in other areas.

Meanwhile, Shahbaz Sharif expressed deep sorrow over the loss of precious lives in a fire in Garhi Shahu. He has constituted a special committee to submit its report on the incident within 24 hours.

Mushahidullah Khan on Asif Zardari

 آصف زرداری سندھ میں نوازشریف کی مقبولیت سے خوفزدہ اورحواس باختہ نظرآرہے ہیں،مشاہداللہ خان

آئندہ انتخابات میں پنجاب سمیت چاروں صوبوں میں حکومت بنانے کے دعوے داربےنظیرکے قاتلوں کوگرفتارنہ کرسکے،اپنے کارکنوں کاکس منہ سے سامنہ کریں گے؟

آصف زرداری کونیب نے نہیں ملک کی اعلی عدالتوں نے جیل بھیجا، آصف زرداری نے جیل کاٹی توکرپشن کے چارجزپر،ان پرکوئی بھی سیاسی مقدمہ قائم نہیں ہوا تھا۔مرکزی سیکرٹری اطلاعات پاکستان مسلم لیگ(ن)

   (    )

پاکستان مسلم لیگ(ن) کے مرکزی سیکرٹری اطلاعات سینیٹرمشاہداللہ خان نے کہاہے کہ آصف زرداری سندھ میں نوازشریف کی مقبولیت سے خوفزدہ اورحواس باختہ نظرآرہے ہیں۔انہوںنے کہاکہ آئندہ انتخابات میں پنجاب سمیت چاروں صوبوں میں حکومت بنانے کے دعوے داربےنظیرکے قاتلوں کوگرفتارنہ کرسکے،اپنے کارکنوں کاکس منہ سے سامنہ کریں گے؟انہوں نے کہاکہ آصف زرداری خودمشرف کے لئے ہوئے این آراوکی باقیات ہے اورآج بڑے فخرسے اس کی باقیات کی قیادت کررہے ہیں ۔مشاہداللہ خان نے کہاکہ آصف زرداری کونیب نے نہیں ملک کی اعلی عدالتوں نے جیل بھیجا۔انہوں نے کہاکہ آصف زرداری نے جیل کاٹی توکرپشن کے چارجزپر،ان پرکوئی بھی سیاسی مقدمہ قائم نہیں ہوا تھا۔انہوں نے کہاکہ آصف زرداری کی سربراہی میں جاری حکومت نے سیاسی نظام کومضبوط نہیں کیا،ملک کے ہرادارے کوتباہی سے دوچارکردیاہے ۔مشاہداللہ خان نے کہاکہ آج زرداری صاحب کی ‘کھاﺅ تے مکاﺅ’پالیسی نے پاکستان کے ہرادارے کومعاشی اورانتظامی لحا ظ سے تباہ حال کردیا۔انہوں نے کہاکہ سڑکوں پراحتجاج کرتے عوام آصف زرداری کودعائیں نہیں ان کے خلاف خداکے آگے دوھائی دے رہے ہیں ۔

PMLN spokesman gives rejoinder to the PTI chief IK

 

بڑھک بازی کی بجائے عمران خان اپنی جماعت کے معاملات پراپنی گرفت مضبوط کرنے پرتوجہ دیں،ترجمان مسلم لیگ(ن)

 

عمران خان نے اپنی جماعت کے قیام سے لے کرآج تک ایک بھی بارپارٹی انتخابات نہیں کروائے، عمرا ن خان نے رمضان کا بھی خیال نہ رکھااورعوام کے سامنے پاکستان مسلم لیگ(ن) کی قیادت پرجھوٹے بہتان باندھے۔


 دوسروں کے اثاثے عوام کے سامنے لانے کی بجائے عمران خان اپنے ذرائع آمدن توبتادیں ، عوام سوال کرتے ہیں کہ عمران خان اپنی جماعت کوبڑی جماعت بنانے کےلئے نگران حکومت کا انتظارکیوں کررہے ہیں۔ترجمان پاکستان مسلم لیگ(ن) مرکزی میڈیاسیل

   (    )



پاکستان مسلم لیگ(ن) کے مرکزی میڈیاسیل کے ترجمان نے کہاہے کہ بڑھک بازی کی بجائے عمران خان اپنی جماعت کے معاملات پراپنی گرفت مضبوط کرنے پرتوجہ دیں۔انہوں نے کہاکہ عمران خان نے اپنی جماعت کے قیام سے لے کرآج تک ایک بھی بارپارٹی انتخابات نہیں کروائے۔ترجمان نے کہاکہ عمرا ن خان نے رمضان کا بھی خیال نہ رکھااورعوام کے سامنے پاکستان مسلم لیگ(ن) کی قیادت پرجھوٹے بہتان باندھے۔ترجمان نے کہاکہ عمران خان نے 30اکتوبر2011کو اعلان کیاکہ تمام مخالفین کے اثاثوں کی چھان بین کرکے عوام کے سامنے لائے جائیں گے،ےہ اعلا ن ایک دھوکہ ثابت ہوا۔ترجمان نے کہاکہ وہ آج کہہ رہے ہیں اپنی جماعت کے سب رہنماﺅں نے اثاثے ویب سائیٹ پررکھیں گے،اس سے بھی مکرجائیں گے۔ترجمان نے کہاکہ دوسروں کے اثاثے عوام کے سامنے لانے کی بجائے عمران خان اپنے ذرائع آمدن توبتادیں ۔ترجمان نے کہاکہ عوام سوال کرتے ہیں کہ عمران خان اپنی جماعت کوبڑی جماعت بنانے کےلئے نگران حکومت کا انتظارکیوں کررہے ہیں۔

PMLN directs the District Leadership and Parliamentarians to Celebrate Independence Month As Month of determination

مسلم لیگ(ن)کا یوم آزادی کے حوالے سے اگست کے مہینے کو خودار،خوشحال اور
خود مختار پاکستان کی منزل حاصل کرنے کے لیے ماہ عزم کے طور پر منانے کا فیصلہ
( )
صدر پاکستان مسلم لیگ (ن) محمد نوازشریف کی ہدایت پر مسلم لیگ(ن) نے یوم آزادی کے حوالے سے اگست کے مہینے کو خودار،خوشحال اور خود مختار پاکستان کی منزل حاصل کرنے کے لیے ماہ عزم کے طور پر منانے کا فیصلہ کیا ہے ۔اس موقع پر تمام ضلعی اور شہری تنظیموں کو ہدایات جاری کی گئی ہیںکہ وہ اس حوالے سے اپنے پروگرامات ترتیب دیں ۔مرکزی سیکرٹری جنرل اقبال ظفرجھگڑا کی جانب سے جاری ہونے والے ایک سرکلرمیںپارٹی کی ڈویژنل ،ضلعی اور تحصیل اور اراکین پارلیمنٹ کے نام جاری کردہ تفصیلی ہدایت نامے میں کہاگیا ہے کہ اس بار ماہ اگست اور ماہ رمضان المبارک اکھٹے آئے ہیں جو 1947ءکی یاد تازہ کرتے ہیں ۔لہذااس حوالے سے افطا ر پارٹیوں کے پروگرامات کا بھی اہتمام کیا جائے ۔ان پروگرامات میں مذاکرے ،تقریری مقابلے ،کھیلوں کے پرو گرامات اور ریلیوں کا انعقاد کیا جائے جو14اگست یوم آزادی کے علاوہ پورا مہینہ جاری رہیں گے ۔مزید کہاگیاہے کہ ان پروگرامات میں پاکستان مسلم لیگ (ن) کی پاکستان کے لےے ماضی کی خدمات اور ملک کو غربت ، بے روزگاری ،لوڈشیڈنگ،مہنگائی اور بد امنی سے آزادی دلوانے کے لیے پارٹی کے ٹھوس پروگرام اوراس کی مضبوط ٹیم کے حوالے سے آگاہ کیا جائے ۔ماہ رمضان اور جشن آزادی کی خوشیوں میں پسے ہوئے اور کمزور طبقوں کو خصوصی طورپر شامل کیاجائے-

Mushahidullah Khan on Govt’s ulterior motives through Fake NAB cases

حدیبیہ پیپرز ملز اور اتفاق فاؤنڈریز کے خلاف ریفرنسز جھوٹ کا پلندہ ہیں۔ مشاہداللہ خان 

پیپلز پارٹی پر قائم مقدمات کو ختم کرنے کے لیے اسے NROکا سہارا لینا پڑا جبکہ مسلم لیگ (ن) کی قیادت

نے تمام مقدمات کا عدالتوں میں سامنا کیا

نواز شریف کو NROکو کالا اور استثنائی قانون قرار دینے اور پارلیمنٹ سے اس کی منظوری کی راہ میں رکاوٹ بننے

کی سزا دینے کی کوششیں کی جا رہی ہیں

مسلم لیگ (ن) قومی معاملات پر اپنے اصولی موقف سے ایک بھی انچ پیچھے نہیں ہٹے گی

پاکستان مسلم لیگ (ن) کے مرکزی سیکرٹری اطلاعات مشاہد اللہ خان نے کہا ہے کہ پاکستان مسلم لیگ (ن) کی قیادت کا ماضی بے داغ اور دودہائیوں کے دوران ان کا کردار قوم کے سامنے ہے۔انہوں نے کہاکہ نواز شریف یا ان کے خاندان نے کبھی عدالتوں سے ماوراء کوئی رعایت طلب نہیں کی ۔حدیبیہ پیپرز ملز اور اتفاق فاؤنڈریز کے خلاف ریفرنسز جھوٹ کا پلندہ ہیں ۔انہوں نے کہا کہ پیپلز پارٹی کے سابقہ ادوار اور جنرل مشرف کے 9سال کے دوران ان بے بنیاد مقدمات سے کچھ برآمد نہ کیا جا سکا،موجودہ حکومت کوبھی شرمندگی کا سامنا کرنا پڑے گا۔مشاہد اللہ خان نے کہا کہ پیپلز پارٹی اور اس کے اتحادی نواز شریف اور مسلم لیگ (ن) کو بلیک میل کرنے کے لیے نیب میں موجود ان بوسیدہ مقدمات کو استعمال کرنا چاہ رہے ہیں لیکن مسلم لیگ (ن) قومی معاملات پر اپنے اصولی موقف سے ایک بھی انچ پیچھے نہیں ہٹے گی ۔انہوں نے کہا کہ سیاسی مفاہمت کی پالیسی کرپشن اور بد عنوانی کو تحفظ دینے کے لیے استعمال کی جارہی ہے ۔مسلم لیگ (ن) اس نام نہاد “لُٹو تے پُھٹو”پالیسی کا حصہ بننے سے انکار کر چکی ہے ۔پیپلز پارٹی پر قائم مقدمات کو ختم کرنے کے لیے اسے NROکا سہارا لینا پڑا جبکہ مسلم لیگ (ن) کی قیادت نے تمام مقدمات کا عدالتوں میں سامنا کیا ۔

انہوں نے کہا کہ مسلم لیگ (ن) کا کوئی ایک بھی کارکن NROسے مستفید نہیں ہوا جبکہ پیپلز پارٹی کی قیادت NROکے ذریعے اپنی ڈوبتی ناؤ کو بچانے کے کوشش کر رہی ہے۔انہوں نے کہا کہ نواز شریف کو NROکو کالا اور استثنائی قانون قرار دینے اور پارلیمنٹ سے اس کی منظوری کی راہ میں رکاوٹ بننے کی سزا دینے کی کوششیں کی جا رہی ہیں ۔

انہوں نے کہا کہ حکومت جو چاہے کر لے مسلم لیگ (ن) حکمرانوں کو من مانیاں نہیں کر نے دیگی اور موجودہ اسمبلیوں کی مدت میں توسیع کے منصوبے کو ہر صورت میں ناکام بنا دیا جائے گا۔

Nawaz Sharif Statement 26 July 2012

انتخابات کو ایک سال کیلئے موخر کرانے کی سازشیںخودفریبی ہے اور اگر کسی کے ذہن میں ایسامنصوبہ ہے تو وہ اُسے نکال دے ،چونکہ مسلم لیگ(ن) اِس طرح کی سازش کا ڈٹ کا مقابلہ کرے گی-پاکستان کے تمام بحرانوں کا حل جلد از جلد آزاد اور منصفانہ انتخابات ہیں،نوازشریف

( )

پاکستان مسلم لیگ(ن) کے صدر محمدنوازشریف نے کہاہے کہ انتخابات کو ایک سال کیلئے موخر کرانے کی سازشیںخودفریبی ہے اور اگر کسی کے ذہن میں ایسامنصوبہ ہے تو وہ اُسے نکال دے ،چونکہ مسلم لیگ(ن) اِس طرح کی سازش کا ڈٹ کا مقابلہ کرے گی-پاکستان کے تمام بحرانوں کا حل جلد از جلد آزاد اور منصفانہ انتخابات ہیں-مسلم لیگ(ن) نے اسمبلی میں رہ کر متفقہ چیف الیکشن کمشنرکی تقرری کا مقدمہ جیتااور اسے یقینی بنایا اور اگر مسلم لیگ(ن) اسمبلیوں سے باہر آ جاتی تو زرداری حکومت اپنے من پسندچیف الیکشن کمشنر کا تقرر کرکے ملک میںنیا بحران کھڑا کردیتی- انہوںنے کہاکہ جس طرح مسلم لیگ(ن) نے متفقہ چیف الیکشن کمشنر کی تقرری کو یقینی بنایاہے اسی طرح وہ ملک میں آزاد نگران حکومتوں کے قیام کو بھی یقینی بنائے گی-انہوںنے کہاکہ ملک گذشتہ چار سالوں میں زرداری حکومت نے ملک کا جو حشرکیاہے اُس کے بعد موجودہ حکومت کا ہر دن قوم اور عوام کیلئے انتہائی بھاری ثابت ہورہا ہے-حکومت کی سب سے بڑی ناکامی اور نااہلی پاکستان کی معیشت کی تباہی ہے جس کے نتیجے میں لوڈشیڈنگ ،مہنگائی،بے روزگاری اور غربت کے عذاب نے عوام کا جینا مشکل کردیا ہے- انہوں نے کہا کہ آج کے دور میں جس ملک کی معیشت کمزور ہواُس کی آزادی ،خودمختاری اور سلامتی داﺅ پر لگ جاتی ہے-ملک کی مضبوطی، استحکام اور خودمختاری کیلئے توانامعیشت ناگزیرہے-انہوںنے کہاکہ مسلم لیگ(ن)کی پالیسیوں پر عملدرآمد جاری رہتاتو آج ہم ایشیاءکے سب سے زیادہ رفتارسے ترقی کرنے والے ملکوں میں شامل ہوتے-مسلم لیگ(ن) کی منشور کمیٹی نے توانائی ،تجارت اور تعلیم کیلئے جامع پروگرام بنایا ہے جس کے ذریعے ملک کی معیشت کو اپنے پاﺅں پر کھڑا کرنے کے ساتھ ساتھ ایشیاءمیں بہترین ترقی کرنے والے ممالک کی صف شامل کیاجائے گا-ا نہوںنے کہاکہ پاکستان کے نوجوانوں کاسب سے بڑامسئلہ معیاری تعلیم اور روزگارہے اور بے روزگاری کا خاتمہ ملک میں صنعتیں انقلاب برپاکرکے ہی کیاجاسکتاہے- پاکستان کی زراعت کو بروئے کارلاتے ہوئے ملک کے چپے چپے پر صنعتیں قائم کی جائیں گی تاکہ ترقی کے ثمرات دیہی علاقوں پر پہنچائیں جا سکیں- انہوں نے کہاکہ موجودہ حکومت اور اس کے اتحادی ملک کے موجودہ حالات کے ذمہ دارہیں جنہوںنے اپنے مفادات پر کوئی سمجھوتہ نہیں کیا لیکن پاکستان کے 18کروڑ عوام کی زندگی بدحال کردی- انہوںنے کہاکہ ماہِ رمضان میں عوام پر لوڈشیڈنگ کا عذاب مسلط کرکے اس ماہ مبارک کے دوران عوام کی مشکلات میں حکومت نے مزید اضافہ کردیا ہے-لوڈشیڈنگ کا مسئلہ بڑی حد تک مصنوعی ہے جس کی وجہ حکومت کی کرپشن اور نااہلی ہے-اگر حکومت اپنے اللے تللے چھوڑ کر بجلی پیدا کرنے کیلئے وسائل پیدا کرے تو 48گھنٹوں میں لوڈشیڈنگ پر بڑی حد تک قابو پایاجاسکتاہے-انہوںنے کہاکہ جنوبی پنجاب بھی مسلم لیگ(ن) کاقلعہ ثابت ہوگا،پاکستان مسلم لیگ(ن) کی حکومت نے جنوبی پنجاب میں تاریخی ترقیاتی منصوبوں کا آغاز کیا ہے اور جس طرح وزیراعلیٰ شہبازشریف نے سیلاب کے دوران امدادی کاروائیوں اور متاثرین کی بحالی کی نگرانی کی عوام اُسے ہمیشہ یاد رکھیں گے-وہ ملتان سے مسلم لیگ(ق) کے رہنما عاصم بھیڑ اور حلقہ 148 سے متعدد ناظمین کی مسلم لیگ(ن) میں شمولیت کے موقع پر بات چیت کررہے تھے- انہوں نے مخدوم رشید میں جلسے کی دعوت بھی قبول کی-اس موقع پر مسلم لیگ(ن) ڈپٹی سیکرٹری جنرل احسن اقبال بھی موجود تھے-

پاکستان مسلم لیگ(ن) کے صدر محمدنوازشریف کی صدارت میںا جلاس ہوا- جس میں فیصلہ کیاگیا کہ اگست کے مہینے کو ماہ ِ عزم کے طورپر منایاجائے گا اور 1947ءکے بعد ایک بار پھر ااگست اور ماہ رمضان المبارک کے یکجاہونے پر اس بات کا عہد کیاجائے گا کہ ہم پاکستان کو غربت،مہنگائی،بے روزگاری ،لوڈشیڈنگ اور بدامنی سے آزادی دلوا کر اسے قائداعظم اور علامہ اقبال کے تصور کے مطابق خود دار ،خوشحال اور خودمختار پاکستان بنائیں گے- اس حوالے سے تمام ضلعوں میں تقاریب منعقد کیجائیں گی- مرکزی تقریب کا اہتمام 5اگست کو لاہور میں کیاجائے گا-اگست کے آخر میں توانائی ،تجارت اور تعلیم کے حوالے سے کراچی میں قومی کانفرنس منعقد کی جائے گی-اجلاس میں سینیٹر اسحق ڈار،احسن اقبال،پرویزرشید،مشاہداللہ،انوشہ رحمن،طارق عظیم اور وزیراعلیٰ شہبازشریف بھی شریک ہوئے-

Mushahid Ullah Khan on Government response to NRO in Supreme Court

حکومت اعلیٰ عدالتوں کے ساتھ تماشہ لگا کر اپنی کرپشن اور نااہلی کو چھپانا چاہ رہی ہے۔مشاہد اللہ خان
عوام عام انتخابات میں حکمران ٹولے کو بھیانک انجام سے دو چار کر دیں گے

پاکستان مسلم لیگ (ن) کے مرکزی سیکرٹری اطلاعات نے کہا ہے کہ وفاق کی جانب سے خط لکھنے کے معاملے پر سپریم کورٹ میں جمع کرائے گئے جواب نے عوام کو ایک بار پھر مایوس کر دیا ہے۔انہوں نے کہا کہ حکومت اعلیٰ عدالتوں کے ساتھ تماشہ لگا کر اپنی کرپشن اور نااہلی کو چھپانا چاہ رہی ہے ۔باربار عدالتوں کی سبکی پاکستان کے لیے عالمی سطح پر جگ ہنسائی کا سبب بن رہی ہے ۔حکومت کو اپنی ساکھ کی تو فکر نہیں ،ملک کی نیک نامی اور قومی وقار کو بھی داؤ پر لگا یا جا رہا ہے ۔
انہوں نے کہا کہ پیپلز پارٹی کچھ خدا کا خوف کرے اور عوام کو ناکردہ گناہوں کی سزا دینے کی بجائے عدالتوں سے نکل کر ان کی حالت زار پر رحم کرے۔مشاہد اللہ خان نے کہا کہ عوام عام انتخابات میں حکمران ٹولے کو بھیانک انجام سے دو چار کر دیں گے اور پیپلز پارٹی ہی سب سے زیادہ نقصان اٹھائے گی ۔

Cameron Munter called on the PML-N Quaid Nawaz Sharif in Islamabad

The PML-N President Mr.Muhammad Nawaz Sharif has called upon the United States to pursue a policy of mutual respect and mutual trust with Pakistan, as only such a policy can restore cooperation between them and thereby serve the cause of peace and stability in the region. Mr.Nawaz Sharif made this remark during a farewell call on him by the outgoing US Ambassador to Pakistan, Ambassador Cameron Munter in Pakistan.

During the course of their meeting, the former Prime Minister emphasized the need for the US to re-orient its policies towards Pakistan in a manner that the country’s democratic institutions become stronger and its economy made less dependent on foreign aid.

The US Ambassador spoke of his admiration for the people of Pakistan adding that he was deeply impressed by the enormous changes taking place which made him confident that the country was headed in the right direction.

The meeting was also attended by Dr.Marilyn Wyatt, wife of the US Ambassador as well as Senator Ishaq Dar, leader of the opposition in the senate.

Ahsan Iqbal on PPP’s high claims on her victory in Multan by-elections

پاکستان مسلم لیگ (ن) کے ڈپٹی سیکرٹری جنرل احسن اقبال نے کہا کہ ملتان کے ضمنی الیکشن آئندہ انتخابات کا پیمانہ نہیں بنایا جا سکتا کیونکہ ضمنی انتخابات میں ووٹر جانتا ہے کہ اس کے ووٹ سے حکومت کی تبدیلی ممکن نہیں ۔لہذا وہ مقامی دھڑے بندیوں اور ضرورتوں کے تحت ووٹ ڈالتا ہے ۔اس کے باوجود یوسف رضا گیلانی کی ذاتی انتخابی مہم میں شرکت سے بھی ان کے صاحبزادے سسک سسک کر جیتے جبکہ ان کے مقابلے میں آزاد امیدوار حصہ لے رہا تھا ۔انہوں نے کہاکہ آئندہ انتخابات میں پیپلز پارٹی اور اس کی اتحادی جماعتوں کو گذشتہ چار سالہ کارکردگی کا جواب دینا ہوگا جس میں قوم پر لوڈ شیڈنگ ،مہنگائی ، بے روزگاری اور بد امنی کا راج مسلط کیا ۔انہوں نے کہاکہ گذشتہ چار سالوں میں زندگی کے ہر شعبے میں مرکزی حکومت کی پالیسیوں کی وجہ سے انحطاط پیدا ہوا ہے جس کا نتیجہ یہ ہے کہ 90فیصد عوام حکومت کی کارکردگی سے نالاں اورمایوس ہیں ۔ 2008کے انتخابات میں ق لیگ نے اپنی غیر مقبولیت کو اربوں روپے کے ترقیاتی منصوبوں اور سرکاری سرپرستی سے دھونے کی کوشش کی تھی لیکن شکست اس کا مقدر بنی ۔حکمران اتحاد کی ہر جماعت نے چار سالوں میں اپنے مفادات کے لیے تمام اصولوں اور ضابطوں کا سودا کیااور لوٹ کھسوٹ کی بے نظیر مثال قائم کی ۔ پاکستا ن کا سب سے بڑا مسئلہ اس کی ڈوبتی ہوئی معیشت ہے جس کو سنبھا لا دینے کا پروگرام او رٹیم مسلم لیگ ن کے علاوہ کسی کے پاس نہیں ۔ انہوں نے کہاکہ پیپلز پارٹی اپنی آئندہ کامیابی کے لیے پاکستان تحریک انصاف پر تکیہ کر کے بیٹھی ہے تاکہ وہ مسلم لیگ (ن) کے ووٹ تقسیم کر کے پیپلز پارٹی کے امیدواروں کے جیتنے کی راہ ہموا ر کر سکے لیکن عوام باشعور ہیں اور جن ووٹرز کو عمران خان سے محبت ہے انہیں اس سے کئی درجہ زیادہ صدر زرداری کے راج سے نفرت ہے ۔اور وہ عمرانْ خان کی محبت میں ملک پر دوبارہ زرداری راج نافذ کرنے کا گناہ کبھی نہیں کر سکتے ۔انہوں نے کہا کہ اگلا انتخابی معرکہ ملک کے لیے فیصلہ کن ہوگا اگر معلق پارلیمنٹ وجود میں آئی تو پھر ہارس ٹریڈنگ اور بندر بانٹ کی سیاست ہوگی ملک کا مقدر ہار جائے گالہذآ ملک کو موجودہ بحرانوں سے نکالنے کے لیے ضرور ی ہے کہ مسلم لیگ (ن) کو عوام اکثریت سے کامیاب کریں تاکہ ایک مضَبوط حکومت وجود میں آئے جو ملک کو درپیش اقتصادی چیلنجز کا سامنا کرنے کی صلاحیت رکھتی ہو اور وہ فیصلے کر سکے جس سے ملکی معشیت کا پہیہ دوبارہ چالو ہو۔